Main Site aawsat.com/urdu

عراقی پارلیمنٹ کے اتحاد کی وجہ سے بڑی جماعت کی جنگ شروع - الشرق الاوسط اردوالشرق الاوسط اردو
الشرق اردو
به قلم:
کو: منگل, 4 ستمبر, 2018
0

عراقی پارلیمنٹ کے اتحاد کی وجہ سے بڑی جماعت کی جنگ شروع

کل بغداد میں پارلیمنٹ کے افتتاحی پروگرام کے درمیان عراقی صدر فؤاد معصوم وزیر اعظم حیدر العبادی نائب صدر اسامہ النجیفی اور نوری المالکی کو دیکھا جا سکتا ہے

بغداد: حمزہ مصطفی

        کل نئے عراقی پارلمنٹ نے سرکاری طور ہر بڑی جماعت کی جنگ کا آغاز کر دیا ہے اور اس کی وجہ سے دو اتحادی کے درمیان اختلافات رونما ہو چکے ہیں کیونکہ ان میں سے ہر ایک بڑی جماعت تشکیل دینا چاہتا ہے اور اسی وجہ سے یہ معلومات بھی مل رہی ہیں کہ اب اس کا فیصلہ اتحادی عدالت کرے گی اور اس معاملہ کی وجہ سے بڑی جماعت تشکیل کرنے کے سلسلہ میں پھر مزید وقت کی ضرورت ہوگی۔

       مقتدی الصدر کی طرف سے مدد کردہ سائرون پر مشتمل اصلاح اور تعمیر نامی اتحاد حیدر العبادی کی قیادت میں نصر نامی جماعت عمار الحکیم کی قیادت میں الحکمہ نامی جماعت ایاد علاوی کی قیادت میں الوطنیہ نامی جماعت اسامی نجیفی کی قیادت میں قرار نامی جماعت نے 177 ارکان پارلیمنٹ ہر مشتمل بڑی جماعت بنانے کے سلسلہ دیگر جماعتوں کی دستخط کے ساتھ درخواست پیش کی ہے اور ان کے مقابلہ میں ہادی العامری کی قیادت میں فتح نامی جماعت اور نوری المالکی کی قیادت میں دولة قانون نامی جماعت پر مشتمل تعمیر نامی اتحاد نے 153 اراکین کی دستخط کے ساتھ اسی طرح کی ایک درخواست پیش کی ہے۔(۔۔۔)

منگل – 24 ذی الحجہ 1439 ہجری – 04 ستمبر 2018ء شمارہ نمبر (14525)

الشرق اردو

الشرق اردو

«الشرق الاوسط» چار براعظموں کے 12 شہروں میں بیک وقت شائع ہونے والا دنیا کا نمایاں ترین روزنامہ عربی اخبار ہے، 1978ء میں لندن كي سرزميں پر میں شروع ہونے والا الشرق الاوسط آج عرب اور بین الاقوامی امور ميں نمایاں مقام حاصل كر چکا ہے جو اپنے پڑھنے والوں کے لئے تفصیلی تجزیے اور اداریے کے ساتھ ساتھ پوری عرب دنیا کی جامع ترین معلومات پیش کرتا ہے- «الشرق الاوسط» دنیا کے کئی بڑے شہروں میں بیک وقت سیٹلائٹ کے ذریعہ منتقل ہونے والا عربی زبان کا پہلا روزنامہ اخبار ہے، جیسا کہ اس وقت یہ واحد اخبار ہے جسے عظیم الشان بین الاقوامی اداروں کے لئے عربی زبان میں شائع ہونے کے حقوق حاصل ہیں جہاں سے «واشنگٹن پوسٹ»،

More Posts - Website - Twitter - Facebook

شيئر

تبصرہ کریں

XHTML/HTML <a href="" title=""> <abbr title=""> <acronym title=""> <b> <blockquote cite=""> <cite> <code> <del datetime=""> <em> <i> <q cite=""> <s> <strike> <strong>