Main Site aawsat.com/urdu

امریکہ اور برطانیہ کی جہازوں میں الیکٹرانک سامان ممنوع - الشرق الاوسط اردوالشرق الاوسط اردو
الشرق اردو
به قلم:
کو: بدھ, 22 مارچ, 2017
0

امریکہ اور برطانیہ کی جہازوں میں الیکٹرانک سامان ممنوع

44

لندن کے ہیتھرو ایئر پورٹ پر”دوسری ونگ” میں لگی الیکٹرانک مشین کو پار کرنے کے لئے تیار مسافر کی فائل تصویر

واشنگٹن ۔ لندن: "الشرق الاوسط”

        کل ریاستہائے متحدہ امریکہ نے اس بات کا اعلان کیا ہے کہ ترکی، اردن، مصر، سعودی، کویت، قطر، امارات اور مراکش جیسے سات عرب ممالک سے آنے والی نو کمپنیوں کی جہازوں میں لیپ ٹاپ اور لابلیٹ جیسے الیکٹرانک سامان لانا ممنوع ہے اور کہا ہے کہ یہ فیصلہ دہشت گردی پر مبنی کاروائیوں کے خطرات سے بچنے کے لیے کیا گیا ہے۔ امریکی ذمہ داروں نے کہا ہے کہ ہر الیکٹرانک سامان کو جہاز میں لگیج کے طور پر رکھے جانے والے بیگ میں رکھنا ضرری ہے۔

        برطانیہ نے بھی اسی طرح کا فیصلہ لیتے ہوئے ترکی، مصر، سعودی، تیونس، اردن اور لبنان سے آنے والی چودہ کمپنیوں کی جہازوں میں لیبپ ٹاپ اور ٹابلیٹ لانے کو ممنوع قرار دیا ہے۔ امریکہ اور برطانیہ کی فیصلہ کے طرز پر کینیڈا کے وزیر ٹرانسپورٹ نے اس بات کی اطلاع دی ہے کہ ان کا ملک بھی ترکی، مشرق وسطی اور شمالی افریقہ سے آنے والی جہازوں میں الیکٹرانک سامان لانے کی ممانعت کے امکان کے سلسلہ میں غور وفکر کر رہا ہے۔

بدھ 23 جمادی الثانی 1438ہجری – 2 مارچ 2017ء شمارہ نمبر {13994}

الشرق اردو

الشرق اردو

«الشرق الاوسط» چار براعظموں کے 12 شہروں میں بیک وقت شائع ہونے والا دنیا کا نمایاں ترین روزنامہ عربی اخبار ہے، 1978ء میں لندن كي سرزميں پر میں شروع ہونے والا الشرق الاوسط آج عرب اور بین الاقوامی امور ميں نمایاں مقام حاصل كر چکا ہے جو اپنے پڑھنے والوں کے لئے تفصیلی تجزیے اور اداریے کے ساتھ ساتھ پوری عرب دنیا کی جامع ترین معلومات پیش کرتا ہے- «الشرق الاوسط» دنیا کے کئی بڑے شہروں میں بیک وقت سیٹلائٹ کے ذریعہ منتقل ہونے والا عربی زبان کا پہلا روزنامہ اخبار ہے، جیسا کہ اس وقت یہ واحد اخبار ہے جسے عظیم الشان بین الاقوامی اداروں کے لئے عربی زبان میں شائع ہونے کے حقوق حاصل ہیں جہاں سے «واشنگٹن پوسٹ»،

More Posts - Website - Twitter - Facebook

شيئر

تبصرہ کریں

XHTML/HTML <a href="" title=""> <abbr title=""> <acronym title=""> <b> <blockquote cite=""> <cite> <code> <del datetime=""> <em> <i> <q cite=""> <s> <strike> <strong>