Main Site aawsat.com/urdu

تعلقات استوار کرنے کے لئے جبیر بغداد پہنچے - الشرق الاوسط اردوالشرق الاوسط اردو
الشرق اردو
به قلم:
کو: اتوار, 26 فروری, 2017
0

تعلقات استوار کرنے کے لئے جبیر بغداد پہنچے

2

بغداد: "الشرق الاوسط”

        سعودیہ عرب کے وزیر خارجہ عادل جبیر نے کل اپنے بغداد کے سفر کو اچانک سفر قرار دیا ہے۔ 1990 سے لے کر آج تک کا یہ پہلا واقعہ ہے کہ کسی بڑے ذمہ دار نے اپنے دو طرفہ تعلقات کو استوار کرنے کے لئے ایسا قدم اٹھایا ہو۔

        جبیر نے عراق کے وزیر اعظم حیدر عبادی اور اپنے ہم منصب ابراہیم جعفری سے ملاقات کرنے کے بعد صحافیوں کو بتایا ہے کہ یہ ملاقاتیں مثبت اور فعال ہیں۔ انہوں نے کہا کہ عراقی وزیر خارجہ کے ساتھ انہوں نے چند مشترک موضوعات کا جائزہ لیا ہے اور وزیر خارجہ نے دوبارہ عراق تشریف لانے کی خواہش ظاہر کی ہے۔جبیر نے اس موقعہ سے کہا ہے کہ ریاض فرقہ وارانہ تقسیم پر غلبہ پانے کے سلسلہ میں مدد کرنے کو  مستعد ہے۔ انہوں نے پرزور انداز میں یہ بھی کہا کہ سعودی عراق کے تمام علاقوں کو ایک علاقہ سمجھتا ہے اور وہ اس کے استحکام اور وحدت کے سلسلہ میں تعاون کرنے کو تیار ہے۔ انہوں نے مزید یہ کہا کہ سعودی عراق کے ساتھ نمایاں تعلقات بنانے کے ساتھ ساتھ دہشت گردی کے خلاف مل کر جنگ لڑنے کا خواہش مند ہے۔

        اس سلسلہ میں عراقی وزارت خارجہ کے ذمہ دار نے کہا ہے کہ جبیر نے عبادی اور جعفری کو بتایا ہے کہ سعودی نئے سفیرکی تعیین کے لئے لائحہ عمل بنا رہا ہے اور دونوں ملکوں کے درمیان براہ راست ہوائی جہاز کے سفر کا تعاون کرے گا۔

اہوار 30 جمادی الاول 1438ہجری – 26 فروری 2017ء شمارہ نمبر {13970}

الشرق اردو

الشرق اردو

«الشرق الاوسط» چار براعظموں کے 12 شہروں میں بیک وقت شائع ہونے والا دنیا کا نمایاں ترین روزنامہ عربی اخبار ہے، 1978ء میں لندن كي سرزميں پر میں شروع ہونے والا الشرق الاوسط آج عرب اور بین الاقوامی امور ميں نمایاں مقام حاصل كر چکا ہے جو اپنے پڑھنے والوں کے لئے تفصیلی تجزیے اور اداریے کے ساتھ ساتھ پوری عرب دنیا کی جامع ترین معلومات پیش کرتا ہے- «الشرق الاوسط» دنیا کے کئی بڑے شہروں میں بیک وقت سیٹلائٹ کے ذریعہ منتقل ہونے والا عربی زبان کا پہلا روزنامہ اخبار ہے، جیسا کہ اس وقت یہ واحد اخبار ہے جسے عظیم الشان بین الاقوامی اداروں کے لئے عربی زبان میں شائع ہونے کے حقوق حاصل ہیں جہاں سے «واشنگٹن پوسٹ»،

More Posts - Website - Twitter - Facebook

شيئر

تبصرہ کریں

XHTML/HTML <a href="" title=""> <abbr title=""> <acronym title=""> <b> <blockquote cite=""> <cite> <code> <del datetime=""> <em> <i> <q cite=""> <s> <strike> <strong>