Main Site aawsat.com/urdu

بغداد کے گرین زون کے دروازوں پر خونریزیاں - الشرق الاوسط اردوالشرق الاوسط اردو
الشرق اردو
به قلم:
کو: اتوار, 12 فروری, 2017
0

بغداد کے گرین زون کے دروازوں پر خونریزیاں

1

کل مظاہرین بغداد کے تحریر میدان میں پولس فورس کے ساتھ چھڑپ میں زخمی شدہ اپنے ایک ساتھی کو لے جاتے ہوئے

بغداد: "الشرق الاوسط”

        بغداد کے گرین زون میں پرسکون ماحول میں شروع ہونے والے مظاہرے خونریز جھڑپ میں بل گئے جس کی وجہ سے چند مظاہرین ہلاک اور سینکڑوں زخمی ہوئے ہیں۔ مظاہرین مقتدی الصدر کے حامی تھے اور ان کا مطالبہ یہ تھا کہ الیکشن کمیشن کو تبدیل کیا جائے اسی لئے پولس فورس نے ان کو منتشر کرنے کے لئے آنسو گیس اور ربڑ کی گولی کا استعمال کیا۔

        سارے معاملے معمول  کے مطابق تھے لیکن یہ معاملہ اس وقت سنگین ہوا جب لوگوں نے الصدر کا بیان سنا جس میں انہوں نے کہا تھا کہ اگر تم آج سورج غروب ہونے تک الیکشن کمیشن کی تبدیلی کے ذریعہ دیواروں کے پیچھے بیٹھے ذمہ داروں سے اپنے مطالبات کی مانگ کرنے  کے لئے گرین زون کے قریب ہو جاؤ گے تو تمہارے مطالبے پورے کر دئے جائیں گے۔ لیکن جب مظاہرین  نے گرین زون تک جانے والے ڈیموکریٹک پل کو پار کرنے کی کوشش کی تو پولس فورس سامنے آگئی۔ اس جھڑپ میں پانچ مظاہرین اور دو پولس اہلکار ہلاک ہوئے اور ان کے علاوہ دو سو سے زائد افراد زخمی ہوئے ہیں۔

        اسی دوران الصدر نے اپنے حامیوں سے ٹیکنیکل انخلاء کا مطالبہ کیا اور وزیر اعظم حیدر العبادی کو اس تشدد کا ذمہ دار  قرار دیا ہے جبکہ العبادی نے اس معاملہ کی تحقیقات کرنے کا حکم جاری کر دیا ہے۔

        اسی درمیان کل شام گرین زون پر کئی کاٹیوشا نامی میزائل داغے گئے ہیں۔

اتوار 16 جمادی الاول 1438ہجری – 12 فروری 2017 شمارہ نمبر {13956}

الشرق اردو

الشرق اردو

«الشرق الاوسط» چار براعظموں کے 12 شہروں میں بیک وقت شائع ہونے والا دنیا کا نمایاں ترین روزنامہ عربی اخبار ہے، 1978ء میں لندن كي سرزميں پر میں شروع ہونے والا الشرق الاوسط آج عرب اور بین الاقوامی امور ميں نمایاں مقام حاصل كر چکا ہے جو اپنے پڑھنے والوں کے لئے تفصیلی تجزیے اور اداریے کے ساتھ ساتھ پوری عرب دنیا کی جامع ترین معلومات پیش کرتا ہے- «الشرق الاوسط» دنیا کے کئی بڑے شہروں میں بیک وقت سیٹلائٹ کے ذریعہ منتقل ہونے والا عربی زبان کا پہلا روزنامہ اخبار ہے، جیسا کہ اس وقت یہ واحد اخبار ہے جسے عظیم الشان بین الاقوامی اداروں کے لئے عربی زبان میں شائع ہونے کے حقوق حاصل ہیں جہاں سے «واشنگٹن پوسٹ»،

More Posts - Website - Twitter - Facebook

شيئر

تبصرہ کریں

XHTML/HTML <a href="" title=""> <abbr title=""> <acronym title=""> <b> <blockquote cite=""> <cite> <code> <del datetime=""> <em> <i> <q cite=""> <s> <strike> <strong>