Main Site aawsat.com/urdu

بین الاقوامی سلامتی کونسل کی طرف سے دو مبصرین کا انتخاب اور پیرس ماسکو کی مشق سے پریشان - الشرق الاوسط اردوالشرق الاوسط اردو
الشرق اردو
به قلم:
کو: بدھ, 21 دسمبر, 2016
0

بین الاقوامی سلامتی کونسل کی طرف سے دو مبصرین کا انتخاب اور پیرس ماسکو کی مشق سے پریشان

%d8%a7%d9%85%d9%86

ماسکو: طہ عبد الواحد

       جب بین الاقوامی سلامتی کونسل نے  متفقہ طور پرحلب سے شہریوں اور اپوزیشن فورسز کے نکلنے کی نگرانی کے لئے دو مبصرین کو بھیجنے سے متعلق فرانسیسی ترمیم شدہ قرارداد کے مسودے ہو منظور کر لیا تو  فرانسیسی ذرائع نے روسی مشق سے متعلق اپنے خوف کا اظہار کیا

       یہ خو دو چیزوں میں مضمر ہے۔ ایک یہ کہ روس اور شامی حکومت اپنے ہمنواؤں کے ساتھ آئندہ کسی بھی مذاکرات میں اپوزیشن کو کنارہ لگانے کے لئے حلب کے زوال اور اپنی کامیابی کا فائدہ اٹھائیں گے تاکہ اس سے ماسکو کے اعتراضات کا فائدہ ہو اور شامی حکومت اسے قبول کرلے۔ دسرا خوف یہ ہے کہ

       2012 میں جنیوا کے بیان اور  بین الاقوامی  قرارداد نمبر 2254 سے دور مذاکرات کے لئے نئی مرجعیت کے سلسلہ میں ماسکو کی نیت کے شکوک و شبہات کےارد گرد گھومتا ہے۔

        اس کے علاوہ سعودی کابینہ نے خادم حرمین شریفین کی صدارت میں منعقدہ کل کے اجلاس میں ملک میں بڑھتے ہوئے واقعات سے متعلق عرب اور بین الاقوامی کوششوں کا جائزہ لیا اور ثقافت اور میڈیا کے وزیر نے کہا کہ کونسل نے ان جرائم کو انسانیت کے خلاف جنگ کے مترادف قرار دیا ہے۔

الشرق اردو

الشرق اردو

«الشرق الاوسط» چار براعظموں کے 12 شہروں میں بیک وقت شائع ہونے والا دنیا کا نمایاں ترین روزنامہ عربی اخبار ہے، 1978ء میں لندن كي سرزميں پر میں شروع ہونے والا الشرق الاوسط آج عرب اور بین الاقوامی امور ميں نمایاں مقام حاصل كر چکا ہے جو اپنے پڑھنے والوں کے لئے تفصیلی تجزیے اور اداریے کے ساتھ ساتھ پوری عرب دنیا کی جامع ترین معلومات پیش کرتا ہے- «الشرق الاوسط» دنیا کے کئی بڑے شہروں میں بیک وقت سیٹلائٹ کے ذریعہ منتقل ہونے والا عربی زبان کا پہلا روزنامہ اخبار ہے، جیسا کہ اس وقت یہ واحد اخبار ہے جسے عظیم الشان بین الاقوامی اداروں کے لئے عربی زبان میں شائع ہونے کے حقوق حاصل ہیں جہاں سے «واشنگٹن پوسٹ»،

More Posts - Website - Twitter - Facebook

شيئر

تبصرہ کریں

XHTML/HTML <a href="" title=""> <abbr title=""> <acronym title=""> <b> <blockquote cite=""> <cite> <code> <del datetime=""> <em> <i> <q cite=""> <s> <strike> <strong>